وہ شہر جہاں 3 سالہ بکرے کو شہریوں نے اپنا ناظم منتخب کرلیا

0
57

نیویارک(اے ون نیوز) انسانوں کے الیکشن لڑنا اور میئر، رکن اسمبلی وغیرہ منتخب ہونا تو ہر جمہوری ملک میں معمول کی بات ہے لیکن آپ یہ سن کر دنگ رہ جائیں گے کہ امریکہ کے ایک چھوٹے سے قصبے میں جانوروں نے میئر کا الیکشن لڑا اور ایک 3سالہ بکرا یہ الیکشن جیت کر اس قصبے کا میئر بن گیا۔ یہ قصبہ امریکی ریاست ورمونٹ میں ہے جس کا نام ’فیئر ہیون‘ ہے اور یہ نیویارک سرحد کے قریب ہی واقع ہے۔ اس کی آبادی 2500نفوس پر مشتمل ہے۔فوکس نیوز کے مطابق یہاں اعزازی میئر کی نشست کے لیے جانوروں میں الیکشن کروایا گیا جس میں ایک بلی، کتا، بکرا اور دیگر کئی جانور امیدوار تھے۔ تمام قصبے کے لوگوں نے ان جانور امیدواروں کو ووٹ دیئے اور بکرا سب سے زیادہ ووٹ لے کر فاتح قرار پایا اور فیئر ہیون کا اعزازی میئر بن گیا۔اس قصبے میں اس سے قبل بھی جانوروں کے الیکشن ہو چکے ہیں اور ان میں سے کسی ایک کو اعزازی میئر مقرر کیا جا چکا ہے۔ اس سے پہلے ایک بلی اعزازی میئر کے عہدے پر فائز رہ چکی ہے۔ قصبے کی یہ انوکھی روایت دراصل قصبے کے مختلف تعمیراتی کاموں کے لیے چندہ اکٹھا کرنے کی غرض سے منعقد کی جاتی ہے۔اس وقت اس قصبے میں ایک کھیل کا میدان بنانا مقصود تھا جس کے لیے یہ الیکشن کروایا گیا۔ الیکشن میں ووٹ ڈالنے کے لیے فی کس 5ڈالر فیس رکھی گئی تھی۔ فیئرہیون کے اصل انسانی میئر جوئی گنٹر نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ”جانوروں کے انتخابات سے جہاں قصبے کے تعمیراتی کاموں کے لیے خاطرخواہ چندہ جمع ہوتا ہے وہیں بچوں کو قصبے کی حکومت میں شامل کرنے جیسا ایک اچھا کام بھی وقوع پذیر ہوتا ہے جو اپنے اپنے جانوروں کو امیدوار بناتے ہیں اور ان میں سے کسی ایک کا جانور اعزازی میئر منتخب ہوتا ہے۔“

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here