جنوبی افریقہ میں مقیم سینئرصحافی سے اپنے ہی ہم وطن نے ایسا کام کر ڈالا کہ پاکستانی کسی کی مدد کرنے سے پہلے ہزار بار سو چیں گے۔۔۔۔

0
110

جوہانسبرگ(ندیم شبیر سے)نئے پاکستان میں ابھی بھی کالے قانون چل رہے ہیں ،دیار غیر میں رزق حلال کی تلاش میں سر گرداں اوور سیز پاکستانیوں کو فراڈ اور جھوٹے مقدمات میں پھنسایا جا رہا ہے،جوہانسبر گ میںمقیم سینئر صحافی روزنامہ جناح کے بیورو چیف اور پاکستان ساﺅتھ افریقہ یو تھ ایسوسی ایشن پریٹوریا کے کو آرڈینیٹر ملک انور علی اعوان کو بھی جھوٹے مقدمے میں پھنسایا جا رہا ہے اور ان کی فیملی کو پاکستان میں ایف آئی اے کے ذریعے پریشان کیا جا رہا ہے،اے ون ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے صحافی انور علی اعوان نے کہا کہ نومبر2017میں ساﺅتھ افریقہ بسلسلہ روز گار آیا تھاڈاکٹر فیاض خان نے آبائی علاقے کا تعارف کروا کر مدد کرنے کا کہا جس پر میں نے اسے دو لاکھ 65ہزار روپے دو ماہ کے لئے اسے قرض پر دئےے،ڈاکٹر فیاض جو کہ ایک نو سرباز ہے اس نے چار ماہ گزرنے کے باوجود پیسے نہیں دئےے،پنچایت میں بات پہنچنے پر ڈاکٹر فیاض جنوبی افریقہ سے پاکستان چلا گیا اور وہاں جا کر مجھے جھوٹے مقدمات کی دھمکیاں دیںاور بعد میں راولپنڈی میں ایف آئی اے کے ذریعے جھوٹی درخواست دے کر میرے گھر سوال وجواب کے لئے نوٹس بھجوا دیا،جس کی وجہ سے مجھے اور میرے گھر والوں کوذہنی کوفت کا سامنا کر نا پڑا،انور علی اعوان نے وزیر داخلہ شہر یار آفریدی اور وزیراعظم پاکستان عمران خان سے اپیل کی ہے کہ اس نو سرباز کی جھوٹی ایف آئی آر کا نوٹس لیں اور اوور سیز پاکستانیوں کو پریشان ہونے سے بچائیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here